گورنمنٹ فرسٹ گریڈ کالج میں 02 دسمبر کو خون عطیہ کیمپ کا انعقاد عوام سے تعاون کرنے کی اپیل

سدلگٹہ ، 29 نومبر (تمیم پاشاہ)- مقامی سرکاری فرسٹ گریڈ کالج میں02 دسبمر کو خون عطیہ کیمپ منعقد کیا گیا اس میں صحت مند افراد، نوجوان فلاحی اداروں کی ذمہ داران خون کا عطیہ دیگر انمول زندگی بچانے کے لئے تعاون کریں یہ درخواست گورنمنٹ فرسٹ گریڈ کالج کے پرنسپل ڈاکٹر وی وینکٹیش نے کی۔

گورنمنٹ فرسٹ گریڈ کالج میں اخباری نمائندوں سے بات کرتے انہوں نے کہا کہ خون کا کوئی متبادل نہیں ہے انسان کے جسم سے ہی خون کی پیداوار ہوتی ہے لہذا ہر صحت مند افراد اور نوجوانوں کو چاہیے کہ وہ کم از کم ہر چھ ماہ میں ایک مرتبہ خون کا عطیہ دے کر ایک انمول زندگی بچانے کے ساتھ ساتھ خود بھی صحت مند رہیں۔

سرحد پر موجود فوجیوں، حاملہ خواتین، بچوں اور سڑک حادثات میں زخمی ہونے والوں سے خون کا عطیہ دینے کی اپیل کی جو کہ تمام عطیات میں سب سے بہتر ہے۔

۔ بلڈ ڈونیشن کیمپ کے آرگنائزنگ کنوینر ڈاکٹر۔ شفیع احمد نے کہا کہ کالج صرف درس و تدریس کے لیے محدود نہیں ہے بلکہ طلباء کو غیر نصابی سرگرمیوں یعنی سماجی سرگرمیوں میں حصہ لینے کی ترغیب دینے اور عوام کی ضروریات کے مطابق سماجی کاموں کے ذریعے ان کی مشکلات کو دور کرنے کے لیے ہم نے بلڈ ڈونیشن کیمپ کا انعقاد کیا ہے۔ جس میں نہ صرف طلباء بلکہ عوام بھی بڑی تعداد میں خون کا عطیات دیکر انمول زندگیوں کو بچانے کے لیے آگے آئیں۔

پریس کانفرنس میں این ایس ایس یونٹ آفیسر آدی نارائنپا، لیکچرر وجیندر اور فیکلٹی ممبران موجود تھے۔

Latest Indian news

Popular Stories

error: Content is protected !!